شراب کی حمالی میں زائد رقم ملتی ہے

سوال: میں محمد شفقت علی ڈرائیوری کا پیشہ کرتا ہوں گاڑی کے مالکان شراب اور بیئر گاڑی میں لئے جاتے ہیں بمبئی تک ۵ ہزار روپے کسی دوسرے مال پر ملتے ہیں تو شراب لے جانے میں ۷ ہزار ملتے ہیں دریافت طلب مسئلہ یہ ہے کہ یہ پیشہ کرنا درست ہے اور جائز ہے یا نہیں؟

Staff April 14, 2015

جواب: شراب کی حمالی کرنا اور اس کو اپنے ٹرک سے ایک جگہ سے دوسری جگہ منتقل کرنا جائز نہیں ہے۔ حدیث پاک میں حضور نے ایسے دس آدمیوں پر لعنت فرمائی ہے جو شراب کے سلسلے میں کسی طرح کا تعاون کریں۔صرف زائد کرایہ کے لالچ میں شراب کی حمالی کرنا سخت گناہ ہے جب معلوم ہوجائے کہ ٹرک میں شراب کی حمالی ہورہی ہے ڈرائیور کو چاہئے کہ ایسے ٹرک پر ڈرائیوری نہ کرے۔

#1

This question is now closed