محرم الحرام کی کچھ بدعتیں

سوال: محرم کے مہینے میں نکاح کرنا اور عورتوں کا سنگار نہ کرنا، تعزیہ بنانا اور اپنے آپ کو زخمی کرنا کیسا ہے؟ کیا قرآن وحدیث سے ثابت ہے۔
شہور خان جہانگیر آباد، بھوپال

Staff April 14, 2015

جواب: محرم الحرام میں نکاح کرنا جائز ہے نکاح کو منحوس سمجھنا غلط ہے ۔ اسی طرح عشرہ محرم میں زینت چھوڑنا، گوشت وغیرہ نہ کھانا، سینہ پیٹنا، مرثیہ خوانی، تعزیہ پر ناریل وغیرہ توڑنا، اس کے سامنے کھانا رکھ کر تبرک کے طو رسے کھانا، تعزیہ لے کر گشت کرنا باجہ وغیرہ کے ساتھ اور اس کو دفن کرنا وغیرہ وغیرہ، یہ سب امور بدعت سیئہ ہیں اور بعض ان میں سے علاوہ بدعت ہونے کے خود بھی حرام ہیں اور بعض میں شرک کا بھی احتمال ہے۔ اس لئے ان تمام امور کا ترک کرنا ضروری ہے اور تعزیہ کا جلوس نکالنا اور ان کے ساتھ ان تمام ناجائز کاموں کا کرنا، علاوہ بدعت ہونے کفاروہنود کے طرز عمل کے مشابہ بھی ہے اس لئے بھی حرام ہے نیز یہ جلوس شان وشوکت اور باجہ گاجہ وغیرہ کے ساتھ ہوتا ہے تو علامت اظہار مسرت کی ہے ، نوحہ وسینہ کوبی (سینا پیٹنا) خود شرعاً حرا م ہے (مسائل شرک وبدعت ص ۰۲۲)

#1

This question is now closed